حویلیاں لاوارث تھانہ گمنام ایس ایچ او اور نہ ہی کوئی ڈی ایس پی

حویلیاں کی حدود میں چوروں کارلفٹروں ڈاکوں اور منشیات فروشوں کا راج عوام عدم تحفظ کا شکار ایک ماہ کے دوران چوری کی متعدد وارداتیں کالفٹر دن دیہاڑے گاڑیاں لے اڑے۔

تفصیلات کے مطابق تھانہ حویلیاں کی حدود میں چوروں ڈاکوں کارلفٹروں منشیات فروشوں اور سٹریٹ کرائم کرنے والوں کا راج ہے۔ شہری عدم تحفظ کا شکار جبکہ پولیس سوشل میڈیا پر کاروائی کرنے اور فوٹو سیشن تک محدود ہے۔  ایس ایچ او تھانہ حویلیاں خاموش تماشائی بن گیا ہے چند روز قبل تھانہ حویلیاں کی حدود مگری گاؤں میں رات کی تاریکی میں ڈاکوں نے تین گھروں میں واردات کے دوران آٹھ تولے طلائی زیوارات تین لکھ بیس ہزار روپے لے اوڑے جس کی رپورٹ عرفان گوہر رحمان اور خانواز نے درج کروائی مگر تاحال کچھ نہ ہوا اسی طرح مین بازار سے دن دیہاڑے کارلفر کیری ڈبہ نمبر 5408لے اوڑے کیری ڈبہ کے مالک حاجی ملنگ نے بتایا کہ میں اپنی گاڑی نماز کے لیے مسجد کے باہر کھڑی کر کے گیا واپس آیا تو گاڑی باہر موجود نہیں تھی یاد رہے اسی طرح چند ماہ قبل تکیہ شیخاں کا رہائشی غلام مصطفیٰ اپنی گاڑی سوزکی نمبر1752 کھڑی کر کے منڈی مویشیاں گیا توواپسی پر گاڑی موجود نہیں تھی جس کا ابھی تک کچھ پتہ نہیں چلا اور اسی طرح چند روز قبل تھانہ حویلیاں کی حدود لنگرہ میں بھی چوری کی وارداتیں ہوئی تھی جن کے بارے میں پولیس ابھی تک سراغ لگانے میں ناکام ہے اسی طرح حویلیاں کے اردگرد مختلف گاؤں میں منشیات کا دھندا عروج پر ہے اور منشیات فروش نوجوان نسل کو تباہ کرنے میں مصروف عمل ہیں لہذا اربابِ اختیار اور مثالی پولیس کے داوے داروں سے سخت نوٹس کی اپیل کی جاتی ہے اور جلد ازجلد سرکل انچارج کی تعیناتی کا مطالبہ کیا جاتا ہے کیونکہ تین ماہ سے سرکل حویلیاں ڈی ایس پی کی کرسی خالی ہے

 


We deeply acknowledge your queries and your kind feedback/comments are highly valuable for us.
If you find anything offensive please inform us or send us your feedback at
[havelian.net@gmail.com]
Thankyou very much, please keep visiting the website :)